دو ماہ سے تلاش جاری تین نامعلوم لڑکے آئے اور اے ٹی ایم کارڈ لے اڑے۔امام بخش

احمد پور لمہ (ویب ڈیسک) دو ماہ سے تلاش جاری تین نامعلوم لڑکے آئے اور اے ٹی ایم کارڈ لے اڑے۔امام بخش تفصیل کے مطابق سونمیانی کے رہائشی امام بخش نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ میں حبیب بنک احمدپورلمہ کے دو ماہ قبل میں حبیب بنک احمدپورلمہ کی برانچ کے اے ٹی ایم میں کیش لینے گیا تو دو لڑکے میرے روکنے کے باوجود اند ر آئے اس وقت میں کوڈ انیٹر کر رہا تھا کہ ایک نے کینسل والے بٹن کو ہاتھ مار دیا اور کارڈ کیچھ دیر کے لیے مشین میں روک گیا اورانھوں نے کہا کہ منیجر کے پاس جاؤ تمہارا کارڈ پھنس گیا ہے میں جیسے ہی پریشانی کے عالم میں منیجر کے پاس گیا تو انھوں نے کہا کہ کیچھ دیر صبر کرو اتنی دیر میں وہ لڑکے گم ہو گئے جب منیجر نے مشین کھولی تو اس میں کارڈ موجود نہیں تھا اسی دوران میرے پاس کیش ریسو ہونے کا میسج آیا کہ دس ہزار کیش نکالا گیا ہے پھر تھوڑی دیر بعد دو مرتبہ بیس بیس ہزار کی رقم نکلنے کے میسج موصول ہوے اور میں احمدپورلمہ منیجر کے پاس اسے بتاتا رہا لیکن وہ میری بات کو مزاق سمجھتے رہے اور میں نے ہیلپ لائین کال کی اور کارڈ بند کروایا سی سی ٹی وی فویٹج میں ان کی شکل واضع ہے لیکن نہ تو پولیس میری مدد کرنے کو تیار ہے اور نہ بنک والے دو ماہ درد درر ٹھوکریں کھانے کے بعدآخر کار میڈیا کا سہارا لے کر میں اعلی حکام سے کاروائی کا مطالبہ کرتا ہوں

Facebook Comments