رمضان بازاروں کے قیام سے صارفین کو اشیاء خوردونوش مقررہ نرخ اور اعلیٰ کوالٹی کے ساتھ مل رہی ہیں جس سے انہیں بھرپور ریلیف حاصل ہورہاہے ممبرقومی اسمبلی مسز صبیحہ نذیر

بہاول پور(نیوزرپورٹ)ممبرقومی اسمبلی مسز صبیحہ نذیر نے کہا کہ رمضان بازاروں کے قیام سے صارفین کو اشیاء خوردونوش مقررہ نرخ اور اعلیٰ کوالٹی کے ساتھ مل رہی ہیں جس سے انہیں بھرپور ریلیف حاصل ہورہاہے۔ انہوں نے ایک بیان میں کہا کہ رمضان بازار 9 بجے صبح سے6 بجے شام تک فنگشنل ہیں جہاں لوگ بڑی تعداد میں روزمرہ استعمال کی اشیاء نہایت خوشگوار ماحول میں خرید رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت پنجاب نے چینی کی55/- روپے فی کلو گرام فروخت کو یقینی بنایا ہے اسی طرح 10 کلوگرام آٹا کا تھیلا290/- روپے میں رمضان بازاروں سے جبکہ310/- روپے میں10 کلوگرام آٹا اوپن مارکیٹ میں دستیاب ہے۔ ایم این اے نے کہا کہ رمضان بازاروں میں گھی اور کوکنگ آئل کے خصوصی سٹال لگائے گئے ہیں جہاں گھی 131 روپے فی کلوگرام اور کوکنگ آئل135/- روپے فی لٹر میں فروخت ہورہا ہے۔انہوں نے کہا کہ رمضان بازاروں میں اشیاء کے نرخ روزانہ کی بنیاد پر سٹالز پر نمایاں جگہ پر آویزاں کیے جارہے ہیں تاکہ صارفین کو خریداری کے وقت دقت نہ ہو۔ انہوں نے مزید کہا کہ پرائس کنٹرول مجسٹریٹس فعال انداز میں اشیاء خوردونوش کے نرخوں اور کوالٹی کی چیکنگ کررہے ہیں اور زائد نرخ پر فروخت کرنے والوں کو موقع پر ہی جرمانہ کیا جارہا ہے۔ایم این اے صبیحہ نذیر نے کہا کہ تمام رمضان بازاروں میں یوٹیلٹی سٹور کے کاؤنٹرز قائم ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پھل، سبزیوں ، دالیں، چاول اور بیسن کی مقررہ نرخ پر فروخت کے لیے رمضان بازاروں میں ایگریکلچر فےئر پرائس شاپس قائم ہیں۔ انہوں نے کہا کہ رمضان بازاروں کی سکیورٹی کے فول پروف انتظامات کو یقینی بنایا گیا ہے۔ پولیس فورس کے ساتھ ساتھ تنظیم شہری دفاع کے رضا کار مستعدی سے خدمات سرانجام دے رہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ یہ خوش آئند امر ہے کہ رمضان بازاروں میں کلوز سرکٹ کیمرے نصب کیے گئے ہیں تاکہ بازاروں میں بہتر انداز میں سکیورٹی اور مانیٹرنگ کی جا سکے۔

Facebook Comments