چند افراد نے مل کر ڈیڑھ اینٹ کی مسجد بنا رکھی ہے

صادق آباد (رحیم یار خان نیوز) موجودہ ضلعی یونائیٹڈ ٹیچرز کونسل کی کوئی آئنی حیثیت نہیں اور نہ ہی پنجاب ٹیچر یونین رجسٹرڈ کا تین دسمبر کو ہونے والے احتجاجی پروگرام سے کوئی تعلق ہے چند افراد نے مل کر ڈیڑھ اینٹ کی مسجد بنا رکھی ہے جو کسی بھی صورت اساتذہ کی نمائندگی نہیں کر سکتے الیکشن سے راہ فرار اور شکست خوردہ عناصر نے اپنی دوکانداری چمکانے کیلئے یونائیٹڈ ٹیچرز کونسل کا نام استعمال کرکے آئنی و اخلاق کی خلاف ورزی کی ہے مرکزی یونائیٹڈ کونسل میں شامل جماعتوں پنجاب ٹیچر یونین، سینئر سٹاف، ایسوسی ایشن، میونسپل کیڈر، ایس۔ای۔ایس نیشنلائزر کیڈر، ہیڈماسٹر ایسوسی ایشن، آئی ٹی یونین سمیت کسی بھی جماعت کا ضلعی صدر / سربراہ اس کونسل کا ممبر نہ ہے پنجاب ٹیچرز یونین و دیگر اتحادی جماعتیں اس اقدام کی بھرپور مذمت کرتی ہیں اور اس کے خلاف ہر قسم کے احتجاج کا حق رکھتی ہیں ان خیالات کا اظہار میاں طاہر بلال، شاہد مسعود، لسان علی گجر، عرفان شاکر، میاں طاہر محمود اختر، ارشد چغتائی، چوہدری محمد الیاس، ملک ساجد محمود، منیر احمد، محترمہ گلناز کوثر، عظمیٰ رمضان، نویدہ کوثر، شفقت پروین، فوزیہ عارف، رخسانہ مقبول و دیگر نے اجلاس کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ اجلاس کی تمام کاروائی مرکزی کنوینئر میاں طارق محمود کو ٹیلی فون پر آگاہ کر دیا ہے اور تحریری درخواست روانہ کر دی گئی ہے اس ضمن میں بروز جمعرات کو صادق آباد اور ہفتہ کو رحیم یار خان تین بجے اجلاس طلب کر لیا گیا ہے جس میں لائحہ عمل طے کیا جائے گا۔

Facebook Comments