موجودہ حکومت نے کھادوں پر سبسڈی ختم کر کے کسانوں پر ظلم کیا ہے کسان بورڈ کسانوں کا معاشی قتل کسی صورت بھی برداشت نہیں کریگی

صادق آباد( ویب ڈیسک) موجودہ حکومت نے کھادوں پر سبسڈی ختم کر کے کسانوں پر ظلم کیا ہے کسان بورڈ کسانوں کا معاشی قتل کسی صورت بھی برداشت نہیں کریگی کسان بورڈ کسانوں کے حقوق کے لئے ہر فورم پر آواز بلند کریگا بھارت کا کسان خوشحال اور پاکستان کا کسان حکمرانوں کی ناقص پالیسیوں کی وجہ سے بدحالی کا شکار ہے۔ زرعی ملک ہونے کے باوجود کسانوں کی بدحالی حکمرانوں کی بدنیتی کا منہ بولتا ثبوت ہے ان خیالات کا اظہار کسان بورڈ کے مرکزی نائب صدر حاجی ریاض احمد چیمہ نے کسان بورڈ کے اجلاس سے گفتگو کرتے ہوئے کیا انھوں نے کہا موجودہ حکومت اپنا قبلہ درست کرلے ورنہ کسان اپنا لینا اور چھیننا بھی جانتے ہیں اگر حکومت نے کھادوں کی سبسڈی بحال نہ کی تو 16جنوری کو کسان بورڈ ڈی سی آفس رحیم یارخان کے سامنے احتجا جی دھرنا دیں گے جس کی قیادت کسان بورڈ کے مرکزی جنرل سیکرٹری ارسلان خان خاکوانی کریں گے ،انھوں نے کہا کہ ضلع رحیم یارخاں میں کسانوں ز مینین سیم ہورہی ہیں مگر کسانوں کو اس کی محنت کا صیح معاوضہ نہیں دیا جارہا ہے شوگر مافیا نے ایکا کرکے کسانوں کو دونوں ہاتھوں سے لوتا جارہا ہے جبکہ چینی کی قیمتیں روز بروز پڑھ رہی ہیں ،شوگرمافیا اور موجودہ حکومت کسانوں کو زندہ درگور کرنے پر تلی ہوئی ہے انھوں کہا کسانوں نے ساتھ کب تک ظلم ستم ہوتا رہے گا انھوں نے مطالبہ کیا کہ کھادوں پر فوری طور پر سبسڈی بحال کی جائے اورکسانوں کو شوگر مافیا کے ظلم ستم سے نجات دلائے جائے اگر خکومت نے فوری ایکشن نہ لیا تو کسان بورڈ حکومت کے خلاف تحریک چلانے پر مجبور ہوں گا کسانوں کے حقوق کو پر صورت یقینی بنایا جائے گا ادائیگی کیلئے اپنا کردار ادا کرنے کی اشد ضرورت ہے ۔

Facebook Comments