رواں سال کے آخر میں عام انتخابات ہو سکتے ہیں

صادق آباد (ویب ڈیسک)رواں سال کے آخر میں عام انتخابات ہو سکتے ہیں جس میں ایسی قیادت ابھرے گی جس کو اسٹیبلشمنٹ اور سیاسی تقاضوں کو سمجھنے کی صلاحیت حاصل ہو گی ‘جے یو آئی قومی سیاست کو پانامہ لیکس کیساتھ کلپ کرنے کے عمل کو غیر سیاسی رویہ سمجھتی ہے ‘ پاکستان کی مغربی سرحدوں پر اس وقت بین الاقوامی سازشیں چل رہی ہیں اس سے پاکستان کے قومی مفاد کی نگہبانی صرف طالبان ہی کر سکتے ہیں ‘ افغان صدر اشرف غنی کے نام خط لکھ دیا ہے جس میں ان کو تجویز دی گئی ہے کہ اگر انجینئر گل دین یار افغان نیشنل سیٹ اپ کا حصہ بن سکتے ہیں تو طالبان کیوں نہیں بن سکتے ، جے یو آئی قومی مفاد پر کوئی سمجھوتہ نہیں کرے گی ، اگر روس کے بااثر سی پیک سے پرے رہی تو پاکستانی قوم صرف چائنہ کے ہاتھوں استعمال ہو گی ان خیالات کا اظہار مرکزی سرپرست اعلیٰ جمعیت علماء اسلام (س) و امیر مجلس خدام الدین حضرت مولانا میاں محمد اجمل قادری نے گزشتہ روز مدرسہ و مسجد ابی حنیفہ صادق آباد میں پر ہجوم پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا‘ اس موقع پر ضلعی امیر جے یو آئی (س) مولانا محمد مشتاق‘ ممتاز عالم دین مولانا میاں زبیر احمد دین پوری‘ حافظ رحمت اﷲ‘ عمیر مشتاق‘ محمد اسلم چدھڑ‘ حکیم حسنین‘ مولانا عبداﷲ ربانی ودیگر بھی موجود تھے۔ انھوں نے کہاکہ ملک میں ممکنہ سیاسی اتحاد سے متعلق چوہدری پرویز الہی اور چوہدری شجاعت حسین کی کوششیں خوش آئند ہیں سابق صدر پرویز مشرف سے انکی ملاقاتوں کو پاکستان کے قومی اداروں کے مابین ہم آہنگی کا ذریعہ سمجھتے ہیں اس اہم آہنگی کے نتیجہ میں 1973ء کا آئین قومی سیاست میں مزید اہمیت پائے گا اور وہ تمام قوتیں جو 1973ء کے آئین کو پامال کرنا چاہتی ہیں ان پر لگام ڈالی جاسکے گی انھوں نے کہاکہ صرف مردم شماری کو بنیاد بنا کر 73ء کے آئین کو سبوتاژ کرنے کی ہر کوشش کو تمام سیاسی فورم پر عبرتناک شکست سے دو چار کیاجائیگا ‘جے یو آئی الیکشن کمیشن آف پاکستان کے نظام میں مبینہ تبدیلیوں اور بنگلہ دیش کی طرز پر کےئر ٹیکر ز کی ضرورت کو ہذف کرنے کی مبینہ کوششوں کو مسترد کرتی ہیں 2018کے الیکشن اگر 2017کے آخر میں ہو جائیں تو کوئی مضحکہ نہیں ہو گا ۔

Facebook Comments