مین بازار سنجر پور میں ریڑھی بانوں کا قبضہ بازار میں جانے والے کو مار مار کر لہو لہان کر دیا

صادق آباد ( نیوزرپورٹ)مین بازار سنجر پور میں ریڑھی بانوں کا قبضہ بازار میں جانے والے کو مار مار کر لہو لہان کر دیا پچیس فٹ کی بازار کو قبضہ گروپ نے پانچ فٹ کر دیا تفصیل کے مطابق سنجر پور کے شاہد اقبال نے بتایا کہ میں اپنی موٹر سائیکل پر سنجر پور گیا بازار سے سودا سلف لینے کی غرض سے میں جیسے ہی بازار میں داخل ہونے لگا تو ریڑھی بان مناف راستے میں ریڑھی لگا کے راستہ بند کر کے کھڑا تھا میں نے اسے کہا کہ بازار جانے کا راستہ تو چھوڑ دو جس پر وہ آگ بگولہ ہو گیا اور مجھے گربان سے پکڑ لیا میں نے اپنی جان چھڑانے کی کوشش کی تو اس کے دیگر بھائی پرویز ،عدنان اور منی بھی آ گئے جنہوں نے مجھے لاتوں اور مکوں سے مارنا شروع کر دیا میرے کپڑے پھاڑ دئے مناف نے ایک راڈ نما سریا میرے سر میں دے ماراجس سے میں شدید زخمی ہو گیا اس کے بھائیوں نے صفائی کے برش سے بھی مجھے زخمی کیا لوگوں نے درمیاں میں آ کر ان کی منت سماجت کی اور میری جان بخشی کروائی ملزمان نے مجھے جان سے مارنے کی دھمکیاں دیتے رہے شاہد اقبال کے ورثا پیر بخش ،ارشد اقبال، راشد اقبال ،عبدالشکور ،خان سمیجہ ،عبدالواحد اور دیگران نے ایس ایچ او کوٹ سبزل سے ملزمان کے خلاف قانونی کاروائی کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ پٹیالوی برادری کے یہ ریڑھی بان سنجر پور میں دہشت کی علامت بنے ہوئے ہیں راہگیر عورتوں اور سکول کی بچیوں پر آوازیں کستے ہیں بازار کو بند کیا ہوا ہے سنجر پور کی اعوام کو ان کی دہشت سے نجات دلائی جائے

Facebook Comments